Shair

شعر

اے بیت مقدس تری عظمت کے دن آئے
اے چشمہ زمزم تری چاہت کے دن آئے

(انیس)

جو فکر وصل ہوتی ہے چاہت میں جا بہ جا
اُس بیقرار نے بھی کیا سب وہ ٹھک ٹھکا

(نظیر)

اس کی چاہت کی چاندنی ہوگی
خوب صورت سی زندگی ہوگی

(بشیر بدر)

نگوڑی چاہت کو کیوں سمیٹا عبث کی جھک جھوری جھیلنے کو
دو گانا پڑ جائے پٹکی ایسی تمہارے اٹھکیل کھیلنے کو

(انشا)

ہر جنم میں اسی کی چاہت تھے
ہم کسی اور کی امانت تھے

(بشیر بدر)

تری چاہت کے سناٹے سے ڈر کر
ہجومِ زندگی میں کھو گئے ہم

(شہرت ‌بخاری)

First Previous
1 2 3 4
Next Last
Page 1 of 4

Poetry

Pinterest Share