• اس بحر میں رہا مجھے چکر بھنور کے طور
    سر گشتگی میں عمر گئی سب وطن کے بیچ
    میر
  • میں نہ جائوں کیسے نوراں تھے ہوئی تو آفریں
    سب پنگھی چھوڑے ہیں تیرے جوت تھے اپنا وطن
    قلی قطب شاہ
  • آبس کے رنج سے ہوے غیروں کے دل پہ بار
    غربت میں خاک اڑائی لگائی وطن میں آگ
    حبیب
  • ہم نے جب وادی غربت میں قدم رکھا تھا
    دور تک یادِ وطن آئی تھی سمجھانے کو
    وحید الہ بادی
  • بند کرلیں مری جانب سے کچھ ایسی آنکھیں
    کوئی خط بھی نہ کبھی اہل وطن کا آیا
    مصحفی
  • آخر چمن سے نگہت گل کر گئی سفر
    خانہ بدوش کو نہیں الفت وطن کے ساتھ
    ذوق
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 11

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter