• ہر بن مو سے دم ذکر نہ ٹپکے خوناب
    حمزہ کا قصہ ہوا‘ عشق کا چرچا نہ ہوا
    غالب
  • صادق جو تھے وفا میں تو کامل تھے عشق میں
    دونوں کے سر روانہ ہوئے ہیں دمشق میں
    انیس
  • کل کہتے ہیں ہوگی قیامت کل کی کل میں لینگے دیکھ
    یاں تو قیامت عشق میں اس کے ہیگی اپنے سر پر آج
    میر تقی میر
  • ہے یہ مختصر، رہِ عشق پر، نہیں آپ ہم، رہے ہم سفر
    تو ہو کس لیے یہ مباحثہ، کہاں! کون! کیسے! جدا ہوا
    امجد اسلام امجد
  • عشق بتوں سے اب نہ کریں گے عہد کیا ہے خدا سے ہم
    آجاویں جو یہ ہرجائی تو بھی نہ جاویں جا سے ہم
    میر تقی میر
  • نام عشق بناں نہ لو مومن
    کیجئے بس خدا خدا صاحب
    مومن
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 163

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter