• رشک تیری دلربائی کا زِبس کھاتی ہے شمع
    دیکھ تیرے حسن کے شعلہ کو جل جاتی ہے شمع
    یقین
  • شمشیر نفس و آئینہ کو کرنے صاف
    ذکر خدا ہے صیقل و سوہاں ہے حسن خلق
    شاہ کمال
  • تیرا نزاکت حسن کا پڑھنے میں لکھنے میں نہ آئے
    او نور ہے روشن بہوت نیں ہے سکت یک دید کا
    قلی قطب شاہ
  • شباب تک نہیں پہنچا ہے عالم طفلی
    ہنوز حسن جوانی یار راہ میں ہے
    آتش
  • کچھ حسن کی ہوتی نہ یہاں قدر و قیمت
    جو عشق کبھی اس کا خریدار نہ ہوتا
    ظہور ‌الدین ‌شاہ ‌عالم
  • حیران سا کھڑا ہے اسے ہوگیا ہے کیا
    آئینہ کس کے حسن کا آئینہ دار ہے
    مصحفی
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 81

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter