Shair

شعر

سوکھا جو چمن اور ہوئی شان گلستان
کیا جانیے کیوں حسن بنا سوختہ ساماں

(روح کائنات)

پاسِ ادب سے چھپ نہ سکا رازِ حسن و عشق
جس جا تمہارا نام سنا‘ سر جھکادیا

(جگر ‌مراد ‌آبادی)

سورج میں ہے تیرا روپ او حسن
سایہ تیرا ہے دھوپ او حسن

(مثنوی حسن)

شہر حسن نے دیدار کا مشتاق کیا
نگہت گل نے بتائی مجھے گلزار کی راہ

(آتش)

ہم جذبہ نگہ سے یہ لطف حسن تیرا
آنکھوں کی راہ دل تک دلدار کھینچتے ہیں

(میر حسن)

گھٹتا نہ تھا کچھ اس سے صنم حسن کا پایا
کوٹھے سے ہمیں دیکھ اتر آئے تو ہوتے

(سرور کا کوروی)

First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 81

Poetry

Pinterest Share