English WordStanza

غزل یا نظم کے چار مصرعے "بند" کہلاتے ہیں۔ چار مصرعوں والی شکل کو بند یا قطعہ بند کیا جاتا ہے۔ مثلاً : کامل ہے جو ازل سے وہ ہے کمال تیرا باقی ہے جو ابد تک وہ ہے جلال تیرا پھندے سے تیرے کیونکر جائے نکل کے کوئی پھیلا ہوا ہے ہر سُو عالم میں جال تیرا (شاعر" الطاف حسین حالی) اکثر معروف شخصیات کے انتقال پر بھی تعزیتی قطعہ بند کہا جاتا ہے،اسی سلسلے کا ڈاکٹر عبد السلام کے انتقال پر ڈاکٹر اسلم فرخی کا بند ملاحظہ فرمائیے: باغ دُنیا میں رہے شاد آباد اب ہیں وہ باغِ جناں کے ناظر لکھو اسلم پئے تاریخِ وصال جو ہر فردِ سلام آخر

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter