Shair

شعر

خبر یہ ہوئی جب کہ ماں باپ کو
کیا گم انہوں نے وہیں آپ کو

(۔۔۔)

شہر میں آکر پڑھنے والے بھول گئے
کس کی ماں نے کتنا زیور بیچا تھا

(اسلم ‌کولسری)

کہی کٹنی مینا کوں، ماں ہوں تری
چچی دو برس توں پیئی ہے مری

(مینا ستونتی)

کیا زیست پھر ان کی جنھیں ماں باپ نہ بخشیں
تیور بھی جو میلے ہوں تو دودھ آپ نہ بخشیں

(انیس)

بولی ماں کہنے پہ صدقے دائی
وہ ترا دودھ شریکا بھائی

(شہید (غلام امام))

ماں ہوں میں کلیجا نہیں سینےمیں سنبھلتا
صاحب مرے دل کو ہے کوئی ہاتھوں سے ملتا

(انیس)

First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 14

Poetry

Pinterest Share