• پوچھیں ہیں وجہ گریۂ خونیں جو مجھ سے لوگ
    کیا دیکھتے نہیں ہیں سب اس بے وفا کا رنگ
    میر
  • رستم تھا درعِ پوش کہ پاکھر میں راہوار
    جرار ، بردبار سبک رو وفا شعار
    انیس
  • بے وفا راستے بدلتے ہیں
    ہم سفر ساتھ ساتھ چلتے ہیں
    بشیر بدر
  • اس عہد میں ایسی محبت کو کیا ہوا!
    چھوڑا وفا کو اُن نے مروت کو کیا ہوا
    میر تقی میر
  • عین محبت میں ہیں مِلاتے باہم جب دو چار آنکھیں
    ہوتی ہیں باہم مہر و وفا سے دو آنکھوں کی چار آنکھیں
    ظفر
  • آیا ہی تھا ابھی میرے لب پر وفا کا نام
    کچھ دوستوں نے ہاتھ میں پتھر اٹھالئے
    ناصر کاظمی
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 43

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter