• قائم وطن کے بیچ تو آسودگی نہ ڈھونڈو
    پر خار گلستان میں ہمیشہ ہیں پائے گل
    قائم
  • دار فانی سے ہے فسردہ مزاجی حاصل
    سبزہ دشت نہ گلزار وطن کی خواہش
    نسیم دہلوی
  • آنکھیں جو دم نزع ہوئیں بند کھلے کان
    آواز سنائی پڑی یاران وطن کی
    اشک
  • روح نے لطف بیاں میں جو چمن کا پایا
    شام غربت میں مزہ صبح وطن کا پایا
    تعشق لکھنوی
  • مجھی پر شاذ پڑتی ہیں نگاہیں نكتہ سنجوں كی
    وطن خوش نام ہی جس وقت تك باقی ہی دم میرا
    شاد عظیم آبادی
  • فانی ہم تو میت ہیں‘ جیتے جی بے گور و کفن
    غربت جس کو راس نہ آئی اور وطن بھی چھوٹ گیا
    فانی
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 11

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter