• ڈیوڑھی سے جو دونوں دُر یکتا نکل آئے
    نزدیک تھا یہ ماں کا کلیجہ نکل آئے
    انیس
  • اصغر کو جُدا دکھ ہو قلق ماں کو جُدا ہو
    گرمی کے سبب دودھ جو گھٹ جائے تو کیا ہو
    انیس
  • کیوں ری ہے شرط ماں سے کہہ آؤں
    ناک چوٹی میں تیری کٹواؤں
    عروج لکھنؤی
  • منکر پاک ہے وہ شیشے کی خوں ریزی سے
    مرد ماں دیکھو تو پھر آنکھیں ہیں کیوں لال اس کی
    جوشش
  • پینگا بندھو پینگو خوں ماں میرا پیچھا ٹک چھوڑ دیو
    گھر کا دھنی ہے گھر منے پنگار ڈولارا کاہیکوں
    ہاشمی
  • تدبیر اک نکالی ہے آنسو نہ اب بہاؤ
    ہم پانی لینے جاتے ہیں تم ماں کے پاس جاؤ
    انیس
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 14

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter