• بڑی ہے شوخڑی عورت پوچھے نت ہاشمی کاں ہیں
    بی بیاں میں ناؤں لے موں بھر اجڑ گئی کوں ہوا کیا خوں
    ہاشمی
  • ہے عورت اک لطیف جنس اپنے مرد کے لیے
    یہ فطرت اس کی ہے کہ اس کی سمت اس کا دل کھنچے
    عالم
  • پڑی ایسی دی ہے چنچل ہور چٹور
    نے ڈر ہے وہ عورت جنم کی دھنڈور
    یوسف زلیخا
  • سونا کبھی شوہر کو میسر نہیں ہوتا
    عورت انہیں باتوں سے ترا گھر نہیں ہوتا
    نازنی
  • غواصی یقیں جان عورت ہے سانپ
    پھبے بل تو نلدئے ہلا عذر جانپ
    غواصی
  • نہ عورت اسے کوئی چھڑا چھانٹ ہے
    تجے ہور اسے اے سکی گانٹ ہے
    غواصی
First Previous
1 2 3 4 5
Next Last
Page 1 of 5

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter