• عشق کیا ہو ہم نے کہیں تو عشق ہمارا جی مارے
    تو نہیں نکورو دلبر اپنا ہم سے ہوا ہے بدتر آج
    میر تقی میر
  • اس قدر ہے بار خاموشی اسیر عشق کی
    بولتی ہیں خانہ زنداں کی کڑیاں آج کل
    تسلیم
  • ہوتی نہیں قبول دُعا ترکِ عشق کی!
    دل چاہتا نہ ہو تو زباں میں اثر کہاں
    حالی
  • عشق کی آگ سوں جلی ہے شمع
    سرستی تا قدم گلی ہے شمع
    ولی
  • ہزاروں بازیاں دھوکے میں اس دم باز سے کھیلیں
    جو ہیں جانباز باز آتے نہیں وہ عشق بازی سے
    واجد علی شاہ
  • پرانا ہو رہیا تھا عشق میرا
    سو تازا کر اسے پھر تھے چھڑیا ہوں
    غواصی
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 163

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter