• آتا ہے جب خیال میں وو سرو سبز پوش
    ہوتا ہے زہر عشق سوں سب تن بدن ہرا
    داؤد اورنگ آبادی
  • ڈستا رہے گا اب تو یونہی زندگی کا ناگ
    ہونا پڑے گا زہر کا خوگر سہیلیو!
    عطیہ ‌بتول ‌بانو
  • ہر شخص اپنے وقت کا سقراط ہے یہاں
    پیتا نہیں ہے زہر کا پیالہ مگر کوئی
    مرتضٰی ‌شریف
  • دھوپ ہے اور زرد پھولوں کے شجر ہر راہ پر
    اک ضیائے زہر سب سڑکوں کو پیلا کرگئی
    منیر ‌نیازی
  • نیش زن گونج ہے بالے کی تری جوں عقرب
    ہو کے زہر آب جو پلکوں سے میرا دل ٹپکا
    شاہ نصیر دہلوی
  • دغا دینے شیطان اس شہر میں
    شکر کوں ملاکر رکھیا زہر میں
    قطب مشتری
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 15

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter