• اوس کو چاہیں گے جو چاہے گا ہمیں
    جم گئی ہے یہ ہمارے دل میں
    الماسِ درخشاں
  • اے صبا توں قول لیا تب ہووے گا دل کوں قرار
    حق پرستی منج رقیباں نا بوجھیں اب زور تھے
    قلی قطب شاہ
  • مری آہ دل سوزاں کو سن کو مت ہنس اے زاہد
    کہ یہ شعلہ لگائے گا تری مسواک میں دھندا
    عاجز
  • برچھی سے پار دل کے اک پل میں ہوگئی ہے
    آنکھوں یں تونے سرمہ دنبالہ دار کھینچا
    محب
  • یہ پاؤں پیٹنا بے فائدہ ہے بس اب تو
    پہنچ چکا ہے سر زخم دل تلک یارو
    الماس درخشاں
  • نہ لگانا تھا تجھے سنگ جراحت جراح
    بن گئے دل کے جو یک لخت یہ پھوڑے پتھر
    شاہ نصیر
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 740

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter