• اب ہمیں ہیں کہ گرفتارِ مصیبت ہیں سدا
    عشق کی جان کو بیٹھے ہوئے کرتے ہیں دعا
    امانت
  • وہ اور کوئی ہوگی سحر جب ہوئی قبول
    شرمندہ اثر تو ہماری دعا نہ تھی
    میر تقی میر
  • اتنا بھی اندھیرا نہ بڑھاؤ کہ کسی روز!
    بجھ جائے چراغوں کی طرح حرفِ دعا بھی
    امید ‌فاضلی
  • پھرتا ہے تو تو گلیوں کے اندر خراب و خوار
    اے مصحفی یہ کس کی تجھے بد دعا لگی
    مصحفی
  • جو دعا گو ہیں ترے ان کی دعائیں ہوں قبول
    صبح جشن طرب افزا میں ہو دائم خنداں
    زوق
  • ذوقِ الم میں حق سے دعا مانگتا ہوں میں
    جتنے بھی مجھ کو دینے ہیں دے دے الم ابھی
    استاد قمر جلالوی
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 26

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter