• بالیں سے نہ اٹھنا تھا کیا تم نے قیامت کی
    لو بیٹھ گئیں آنکھیں بیمار محبت کی
    مہتاب داغ
  • دل کو تو کھونٹ کھونٹ کے رکھا
    مانتی ہی نہیں مگر آنکھیں
    مہتابِ داغ
  • رشک ریاض خلد ہیں رنگیں عزار دوست
    آنکھیں کہاں سے لاؤں جو دیکھوں بہار دوست
    شاد عظیم آبادی
  • منکر پاک ہے وہ شیشے کی خوں ریزی سے
    مرد ماں دیکھو تو پھر آنکھیں ہیں کیوں لال اس کی
    جوشش
  • کِھلے ہیں ایسے ہری شاخ پر رُتوں کے گلاب
    سجی ہوں چہرے پہ جیسے لہو سے تر آنکھیں
    جاوید ‌احساس
  • میری آنکھیں روتی ہیں ناسخ اسی افسوس میں
    آہ ہم تر ہوں لب آل پیمبر خشک ہوں
    ناسخ
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 61

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter